Jump to content

Wy/ur/اسپین

From Wikimedia Incubator
< Wy‎ | ur
Wy > ur > اسپین

اسپین ایک ملک ہے جو یورپ میں واقع ہے۔ یہ ملک یورپ کو افریقہ سے الگ کرتا ہے۔سفر کرنے کے لئے اسپین ایک زبردست جگہ ہے۔اندلس براعظم یورپ کے جنوب مشرق میں بحر اوقیانوس، آبنائے جبل الطارق اور بحیرہ روم سے ملحق، ملک اسپین میں واقع ایک بڑا گنجان آباد علاقہ ہے۔ جس پر 19 جولائی 711 ء کو مسلمان سپہ سالار طارق بن زیاد نے بادشاہ راڈرک (رودریگو)کو شکست دے کر قبضہ کیا تھا۔ سلطنتِ رومہ والے اس ملک کو ہسپانیہ کہتے تھے۔ یہ جرمن قوم "واندلس" (Vandalus) سے موسوم ہے۔اسپین میں ملک کا سربراہ بادشاہ ہے اور موجودہ بادشاہ کا نام خوان کارلوس اول (Juan Carlos I)ہے، سپین میں پارلیمانی نظام ہے جس کے دو ایوان ہیں سینیٹ (ایوانِ بالا) اور کانگرس (ایوانِ زیریں)، حکومت کا سربراہ وزیر اعظم ہوتا ہے جس کو ہسپانوی زبان میں Presidente del Gobierno (یعنی حکومت کا سربراہ)کہتے ہیں۔


خطے[edit | edit source]

Regions of Spain
سرسبز اسپین (گلاشیا, آسٹریاز, کینٹابریا)
شمالی اسپین (آرگون, باسقی کنٹری, Navarre, لہ رائجا)
Eastern Spain (Catalonia, Valencia, Murcia)
Central Spain (Community of Madrid, Castile-La Mancha, Castile-Leon, Extremadura)
اندولسیہ
Balearic Islands (Mallorca, Menorca, Ibiza, Formentera)
Canary Islands (Tenerife, Gran Canaria, Fuerteventura, La Gomera, Lanzarote, La Palma, El Hierro)
Cities, islands and crags in North Africa (Ceuta, Melilla, Crag of Vélez de la Gomera, Crag of Alhucemas, Chafarinas Islands, Alboran Island)


سمجھ لیجئے[edit | edit source]

رسائی[edit | edit source]

بذریعہ جہاز[edit | edit source]

بذریعہ ٹرین[edit | edit source]

بذریعہ گاڑی[edit | edit source]

بذریعہ بس[edit | edit source]

بذریعہ کشتی[edit | edit source]

گھومنا پھرنا[edit | edit source]

دیکھے[edit | edit source]

کریں[edit | edit source]

تہوار اور واقعات[edit | edit source]

سیکھے[edit | edit source]

کام[edit | edit source]

خریداری[edit | edit source]

کھانا پینا[edit | edit source]

کھانے کا خرچہ[edit | edit source]

سونے کے انتظامات[edit | edit source]

رہن سہن کا خرچہ[edit | edit source]

محفوظ رہے[edit | edit source]

نمٹنا[edit | edit source]

مذید[edit | edit source]

ویکی نیوز