Wn/ur/ملالہ کا کوئین الزبتھ ہسپتال میں باقاعدہ علاج شروع کر دیا گیا

From Wikimedia Incubator
< Wn‎ | urWn > ur > ملالہ کا کوئین الزبتھ ہسپتال میں باقاعدہ علاج شروع کر دیا گیا
Jump to: navigation, search

برمنگھم ۔دہشت گردوں کی گولی کا نشانہ بن کر زخمی ہونے والی ملالہ یوسف زئی کا برمنگھم کے کوئن ایلزبتھ ہسپتال میں نیورو سرجن اور دوسرے ڈاکٹروں نے باقاعدہ علاج شروع کردیا ہے ۔ چودہ سالہ ملالہ کو متحدہ عرب امارات کی جانب سے دی گئی خصوصی ایئر ایمبولینس کے ذریعے گزشتہ روز برمنگھم پہنچایا گیا، ان کے ہمراہ ان کے والد، بھائی اور پاکستانی آرمی کے ڈاکٹر بھی تھے۔ کوئین الزبتھ ہسپتال کے میڈیکل ڈائریکٹر ڈاکٹر ڈیو روسر نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اگر ملالہ کے ٹھیک ہونے کی امید نہیں ہوتی تو انہیں پاکستان سے یہاں نہیں لایا جاتا۔ انھوں نے کہا کہ میں نے اِس وقت تک ملالہ کا خود جائزہ نہیں کیا مگر میرا کا اندازہ ہے کہ ملالہ کو کم از کم چند ہفتوں تک ہسپتال میں زیرِ نگہداشت رہنا پڑے گا۔ان کا کہنا تھا کہ ملالہ کی صحت کے بارے میں وقتا فوقتا اطلاعات دیں جائیں گی تاہم اس معاملے میں تفصیلات ظاہر نہیں کی جائیں گی۔ ان کا کہنا تھا کہ اس کی وجہ یہ ہے کہ ہر مریض کی طرح انہیں بھی حق ہے کہ ان کے طبی معاملات راز میں رکھے جائیں۔ کوئین الیزبتھ ہسپتال کی ترجمان فیونا گلیبی یوسکا نے بتایا کہ برمنگھم کے ہسپتال میں اہم ٹراما سینٹر موجود ہے جس کی خصوصیت میں بم حملوں میں زخمی ہونے والوں اور گولی اور چاقو سے گھائل ہونے والوں کا علاج شامل ہے۔ہمارے پاس افغانستان اور عراق میں زخمی ہونے والے بھی لائے جاتے ہیں جن کا یہاں علاج کیا جاتا ہے۔ ہمارے پاس گولیوں سے اور بم حملوں سے شدید زخمی ہونے والوں کے علاج کا وسیع تجربہ ہے ۔